مرجع عالی قدر اقای سید علی حسینی سیستانی کے دفتر کی رسمی سائٹ

فتووں کی کتابیں » توضیح المسائل جامع

دوسرا مقام : (سفر کو ختم کرنے والی چیزوں میں سے)کسی جگہ پر كم از كم دس دن رہنے کا قصد ← → احکامِ وطن

وطن سے اعراض کرنے کے احکام

مسئلہ 1608: اگر انسان اپنے وطن كو نظر انداز کرے اور پھر وہاں نہ رہنا چاہتا ہو تو جب وہاں سے خارج ہو اس نے اپنے وطن سے اعراض کیا ہے۔ اس بنا پر اس وقت سے جب بھی اس جگہ پر صلہٴ رحم، زیارت، تفریح وغیرہ کے لیے جائے اس کےلیے وطن کا حکم نہیں رکھتا اور اس کی نماز وہاں قصر ہے گرچہ اس نے اپنے لیے کسی دوسرے وطن کا انتخاب نہ کیا ہو، مگریہ کہ ان عناوین میں سے کوئی ایک جو نماز کےکامل ہونے کا سبب ہے جیسے کثیرالسفر ، خانہ بدوش، دس دن رہنے کا قصد اس پر صدق كرے تو اس صورت میں اس کی نماز کامل ہے۔

مسئلہ 1609: وطن سے اعراض اور اسے نظرانداز کرنے کا معیار یہ ہے کہ انسان اطمینان رکھتا ہو آئندہ اس جگہ رہنے کے لیے واپس نہیں آئےگا ، اس بنا پر جو شخص کسی وجہ سے اپنے وطن سے جیسے ڈیوٹی، شادی، پڑھائی، وغیرہ کے لیے جاتا ہے اور دوسرے شہر کو اپنے وطن کے طور پر انتخاب کرتا ہے چنانچہ قابلِ توجہ احتمال دے رہا ہو کہ آئندہ دوبارہ رہنے کے لیے اپنے وطن واپس آئے گا تو اس صورت میں اعراض صدق نہیں کرے گا اس لیے جب بھی اس جگہ پر جائے اس کی نماز کامل ہے۔

قابلِ ذکر ہے وہ بچے جو وطن کے انتخاب اور اعراض کرنے میں خود فیصلہ كرنے کی صلاحیت نہیں رکھتے اور صاحب اختیار بھی نہیں ہیں اور عرفاً اپنے والدین یا ان میں سے كسی ایک کے تابع ہیں خواہ بالغ ہوں یا نا بالغ ہوں۔ انتخابِ وطن اور وطن سے اعراض کے مسئلے میں والدین کے تابع ہوں گے اس صورت کے علاوہ خود ان کا فیصلہ وطن کے انتخاب اور اعراض كے لیے معیا رہوگا۔
دوسرا مقام : (سفر کو ختم کرنے والی چیزوں میں سے)کسی جگہ پر كم از كم دس دن رہنے کا قصد ← → احکامِ وطن
العربية فارسی اردو English Azərbaycan Türkçe Français