مرجع عالی قدر اقای سید علی حسینی سیستانی کے دفتر کی رسمی سائٹ

فتووں کی کتابیں » توضیح المسائل جامع

مبطل یازدہم: نماز کی رکعت میں باطل شکوک کا پیش آنا ← → مبطل نہم: فعل کثیر اور ایسے کام کا انجام دینا جو نماز کی شکل خراب کر دے

مبطل دہم: کھانا پینا

مسئلہ 1394: اگر انسان نماز میں اس طرح سے کھائے یا پیے کہ نماز کی شکل کو خراب کر دے اس طرح سے کہ یہ نہ کہیں نماز پڑھ رہا ہے، جان بوجھ کر ہویا بھول كر اس کی نماز باطل ہو جائے گی لیکن اگر نماز کی شکل خراب نہ ہو چنانچہ جان بوجھ کر ہو تو احتیاط واجب کی بنا پر نماز باطل ہو جائے گی لاز م ہے کہ اسے دوبارہ پڑھے لیکن اگر بھول كر ایسا کیا ہو تو اس کی نماز اشکال نہیں رکھتی۔

مسئلہ 1395: اگر نماز کے دوران وہ کھانا جو منھ میں یا دانتوں میں پھنسا ہوا ہے نگل لے اس کی نماز باطل نہیں ہوگی اور اسی طرح اگر تھوڑی مصری قند یا شکر وغیرہ منھ میں رہ جائے اور نماز کے دوران آہستہ آہستہ پگھل کر اندر جائے تو حرج نہیں ہے۔
مبطل یازدہم: نماز کی رکعت میں باطل شکوک کا پیش آنا ← → مبطل نہم: فعل کثیر اور ایسے کام کا انجام دینا جو نماز کی شکل خراب کر دے
العربية فارسی اردو English Azərbaycan Türkçe Français